Ab Mazeed Es Shakhs Se Rishta Nahi Rakha Jata By Tehzeeb Hafi Urdu Hindi Poetry Lyrics

 Ab Mazeed Es Shakhs Se Rishta Nahi Rakha Jata 

Jis Se Ek Shakhs Ka Parda Nahi Rakha Jata

Ek Tu Bas Main Nahi Tujh Se Mohabat Na Karun

Aur Hath Bhi Halka Nahi Rakha Jata

Tun Bhi Kab Mujhy Mere Mutabiq Saza De Paya 

Kisi Ne Bharna Tha Peymana Agar Khali Tha

Ek Dukh Ye Keh Tun Milne Nahi Aya Mujh Se

اب مزید اس شخص سے رشتہ نہیں رکھا جاتا

جس سے ایک شخص کا پردہ نہیں رکھا جاتا

ایک تو بس میں نہیں تجھ سے محبت نہ کروں

اور ہاتھ بھی ہلکا نہیں رکھا جاتا 

تو بھی کب مجھے میرے مطابق دکھ دے پایا

کسی نے بھرنا تھا پیمانہ اگر خالی تھا

ایک دکھ یہ کہ تو ملنے نہیں آیا مجھ سے



Post a Comment

Previous Post Next Post